“35 targets are selected in the region while the US is on our target”

Threatening America
تہران ایران کی پاسداران انقلاب کے سینئر کمانڈر جنرل غلام علی ابو حمزہ نے بیان جاری کرتے ہوئے امریکہ کو دھمکی دیدی ہے جس سے خطے میں جنگ کا خطرہ شدید ہو گیاہے ۔

غیر ملکی میڈیا کے مطابق جنرل غلام علی ابو حمزہ نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا کہ ایران نے خطے میں 35اہداف چن رکھے ہیں ، تل ابیب بھی ایران کے ہدف میں ہے جبکہ آبنائے ہرمز میں امریکی جنگی جہاز بھی ایرانی اہداف میں شامل ہیں ۔

Protests against Trump in more than 70 cities in the United States

یاد رہے کہ امریکی صدر نے بیان جاری کرتے ہوئے کہا تھا کہ امریکی صدر ٹرمپ نے ٹویٹر اکاونٹ کے ذریعے دیے جانے والے پیغام میں ایران کو بڑی دھمکی دیتے ہوئے کہا ہے کہ ان کے باون اہم مقامات امریکی نشانے پر ہیں، اگر ایران نے امریکی تنصیبات پر حملہ کیا تو اس کا جواب دیں گے، امریکی حملہ تیز ہوگا اور انتہائی شدت سے کیا جائے گا۔ٹرمپ نے لکھا کہ ایران امریکی تنصیبات پر حملے کی دھمکیاں دے رہا ہے، ایران نے حملہ کیا تو اس کی تنصیبات پر حملہ کر دیں گے، ان جگہوں میں کچھ ایران اور ایرانی ثقافت کے لیے بہت اہم ہیں، امریکا مزید دھمکیاں سننا نہیں چاہتا۔

یہاں یہ امر قابل ذکر ہے کہ دو روز قبل امریکہ نے بغداد میں ڈرون حملے کے دوران ایران کی القدس بریگیڈ کے چیف جنرل قاسم سلیمانی کو قتل کر دیا تھا جن کی میت آج تہران پہنچا دی گئی ہے اور تدفین منگل کے روز آبائی شہر کرمان میں کی جائے گی ۔ایران نے اپنے جنرل کے قتل کا بدلہ لینے کا اعلان کر دیاہے اور ریاست میں سرخ جھنڈا بھی لہرا دیا ہے ۔

Leave a Reply

Your email address will not be published. Required fields are marked *