شوبازیوں کا دورگزرچکا پنجاب میں اب صرف نیک نیتی سے کام ہورہا,عثمان بزدار

لاہور شوبازیوں کا دور گزر چکاہے،پنجاب میں اب صرف نیک نیتی سے کام کام اور صرف کام ہورہاہے۔

تفصیلات کے مطابق لاہور میں وزیراعلیٰ پنجاب عثمان بزدارسے تحریک انصاف کے صدور اور جنرل سیکرٹریز نے ملاقات کی ہے۔ملاقات میں صوبے میں پارٹی امور اور باہمی تعاون کے نظام کو مزید بہتر بنانے پر تبادلہ خیال کیاگیا جبکہ نچلی سطح پر پارٹی کو فعال بنانے پر بات چیت کی گئی۔اس موقع پر وزیراعلیٰ پنجاب کا کہنا تھا کہ تنقید برائے تنقید کے باوجود پنجاب کی کارکردگی دیگر صوبوں سے بہتر ہے،ایسے عناصر تنقید کرتے رہیں گے جبکہ پنجاب آگے بڑھتا جائے گا۔انہوںنے کہاشوبازیوں کا دور گزر چکاہے،پنجاب میں اب صرف نیک نیتی سے کام کام اور صرف کام ہورہاہے۔وزیراعلیٰ نے یہ بھی کہا کہ وہ بہت پارٹی کارکنان سے ہر ضلع میں جا کر ملاقات کریں گے۔

عمران خان کے معاون شہزاد اکبر کے بیرون ملک دوروں اور ایسٹ ریکوری یونٹ پر کتنا خرچ آیا ؟ تفصیلات سامنے آ گئیں

اسلام آباد پاکستان مسلم لیگ ن کے مطالبے اور سوال پر کابینہ ڈویژن نے قومی اسمبلی میں بیرون ملک سے اثاثوں کی واپسی کیلئے قائم کیے گئے یونٹ (اے آر یو )کی کارکردگی پر مبنی تحریری جواب جمع کروا دیاہے جبکہ اس میں کسی کامیابی کا ذکر تو نہیں کیا گیا لیکن ٹیم کے اخراجات کی تفصیل ضرور دی گئی ہے ۔

تفصیلات کے مطابق اے آر یو کا قیام 2018 کے ستمبر میں عمل میں آیا تاہم مریم اورنگزیب کے سوال پر جواب تو جمع کروا دیا گیاہے لیکن اس میں کسی بھی کامیابی کا ذکر نہیں کیا گیاہے ، اخراجات کی فراہم کی گئی تفصیلات کے مطابق 11 بیرون ملک دوروں کی مد میں یونٹ نے 40 لاکھ روپے کے قریب رقم خرچ کی گئی ۔شہزاد اکبر نے چار غیرملکی (سوئٹزرلینڈ، دبئی اور لندن کے دو) دورے کیے، جن پر 18 لاکھ روپے کے قریب سرکاری خزانے سے خرچ ہوئے۔ ان دوروں کی منظوری وزیراعظم عمران خان نے دی تھی۔

شہزاد اکبر کے علاوہ ریکوری یونٹ کے ماہرین اور دیگر حکام نے بھی لندن، سوئٹزرلینڈ اور چین کے دورے کیے۔اس کے علاوہ ستمبر 2018 میں قیام سے لے کر آج تک یونٹ پر 2.35 کروڑ روپے اخراجات ہو چکے ہیں، جن میں یونٹ کے ملازمین کی تنخواہیں بھی شامل ہیں۔

پی آئی سی کا واقعہ انتہائی افسوسناک اور قابل مذمت ہے : چیف جسٹس آف پاکستان

اسلام آباد  چیف جسٹس آف پاکستان جسٹس آصف سعید کھوسہ بھی سانحہ پی آئی سی پر بول پڑے اور اس واقعے کو انتہائی افسوسناک قراردیدیا۔

ایک تقریب سے خطاب کرتے ہوئے چیف جسٹس کا کہنا تھا کہ لاہور واقعے نے دونوں شعبوں کو ڈی ویلیو کیا، ڈاکٹراور وکیل دونوں باوقار پیشے ہیں،دونوں کے ساتھ باوقار روایات منسوب ہیں۔معززپیشے سے تعلق رکھنے والوں کو خوداحتسابی کے عمل سے گزرنا ہوگا۔انہوں نے کہا واقعہ لاہور ہائیکورٹ میں زیر سماعت ہے اس لئے اس پر بات نہیں کرنا چاہتا۔پی آئی سی میں جو ہوا وہ نہیں ہونا چاہئے تھا۔انہوں نے واقعے میں جاں بحق افراد کے کواحقین سے ہمدردی کااظہاربھی کیا۔

انہوں نے ماڈل کورٹس کے قیام پر بات کرتے ہوئے کہا ماڈل کورٹس نے شاندار کام کیا۔ان کے ذریعے تیز ترین انصاف کی فراہمی ممکن بنائی گئی۔

سیاحتی مقامات تک سڑکوں کی تعمیر , ملاکنڈاورہزارہ ڈویژن کیلئے5ارب روپے کی منظوری

پشاورسیاحت کے فروغ کیلئے خیبرپختونخوا حکومت نے دوردراز کے سیاحتی مقامات تک رسائی آسان بنانے کیلئے سڑکیں بنانے کا فیصلہ کیا ہے۔اس ضمن میںملاکنڈاورہزارہ ڈویژن کیلئے5ارب روپے کی منظوری دے دی گئی۔انتفصیلات کے مطابق خیبرپختونخوا کے سینئر وزیرعاطف خان نے کہا ہے کہ ملاکنڈاورہزارہ ڈویڑن کیلئے 5 ارب روپے کی منظوری دے دی گئی۔ان فنڈزسے سیاحتی مقامات تک سڑکوں کی تعمیرہوگی۔پہلے مرحلے میں 14 سڑکیں تعمیرہوں گی۔ان سڑکوں کی تعمیر سے دوردراز کے سیاحتی مقامات تک رسائی آسان ہوجائے گی جو سیاحت کے فروغ کا سبب بنے گی۔ فنڈزسے سیاحتی مقامات تک سڑکوں کی تعمیرہوگی۔

بچوں سے زیادتی کرنے والوں کو سرعام پھانسی دینے سے متعلق بل قومی اسمبلی میں پیش

اسلام آباد بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کوسرعام پھانسی دینے سے متعلق بل قومی اسمبلی میں پیش کردیاگیا، اقلیتی رکن جیمز اقبال کا بل قومی اسمبلی کی قائمہ کمیٹی کوبھجوا دیا گیا۔

نجی ٹی وی ہم نیوزکے مطابق مجوزہ بل میں کہاگیا ہے کہ 7سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کو سزائے موت دی جائے، اگرمجرم کی عمر21سال سے زائد ہوتو100افراد کے سامنے پھانسی دی جائے،مجوزہ بل میں کہاگیاہے کہ 10سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کوعمر قیدکی سزا دی جائے، 14سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کو عمر قید کی سزا دی جائے، بل میں 18سال سے کم عمر بچوں کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کو عمر قید کی سزا کی تجویزکی گئی ہے،بل میں کہاگیا ہے کہ معذورافراد کے ساتھ زیادتی کرنے والوں کو 14 سال قید کی سزا دی جائے۔

ڈائیوو نے ایک دم کرایہ 1500 روپے کم کردیا مگر کہاں کا اور کیوں؟انتہائی دلچسپ وجہ بھی سامنے آگئی

لاہورسے کراچی موٹروے کے اثرات سامنے آنے لگے ہیں اور  نجی بس سروس ڈائیوونے لاہور تا کراچی کے کرائے میں پندرہ سو روپے کے قریب کمی کردی۔کرائے میں کمی وجہ موٹروے کابننا ہے جس سے   فاصلہ  کم ہوگیا۔

ڈائیوو  کے نمائندہ نےکراچی اور لاہور کے  کرائے میں  کمی کی تصدیق کی ہے اور  بتایا کہ پہلے اس روٹ کا کرایا پانچ ہزار پچاس روپے ہوتا تھاجو کم ہوکر تین ہزار پانچ سو روپے کردیا گیاہے۔انتظامیہ کے بقول موٹروے کی وجہ سے نہ صرف سفری سہولت میسر ہوئی ہے بلکہ فاصلہ بھی کم ہواہے جس سے تیل کی کھپت کم ہونے کے ساتھ دیگر اخراجات میں بھی کمی ہوئی ہے، اب براستہ موٹروے کراچی تک ساڑھے چودہ گھنٹے کا سفر رہ گیا۔

مہنگائی کے طوفان میں مزید اضافہ،یوٹیلیٹی اسٹورزپرگھی 13 روپے فی کلومہنگ

لاہورمہنگائی کے طوفان میں مزید اضافہ ہوگیا،یوٹیلیٹی اسٹورزپرگھی 13 روپے فی کلومہنگا کردیاگیا۔دنیا نیوز کے مطابق گھی کی قیمت بڑھائے جانے کا نوٹیفکیشن بھی جاری کردیاگیاہے۔ اس اضافے کے ساتھ یوٹیلٹی اسٹور پر گھی کی قیمت 162 روپے سے 175 روپے فی کلوہوگئی ہے۔

جب تک ہم اپنے پاوں پر کھڑے نہیں ہوں گے یورپ کے غلام رہیں گے،وزیردفاع

اسلام آبادوفاقی وزیر دفاع پرویزخٹک کہتے ہیں کہ پاکستان ایک سال کے اندر ترقی کی راہ پر گامزن ہو جائے گا، اس ملک میں کوئی ٹیکس نہیں دیتا۔عوام پاکستان کی ترقی میں اپنا کردار ادا کریں۔اگرلیڈروں کوعوام سے محبت ہوتی تو آج ملک کی یہ حالت نہ ہوتی.

وزیردفاع پرویزخٹک نے کہاجب تک ہم اپنے پاوں پر کھڑے نہیں ہوں گے یورپ کے غلام رہیں گے،ہم قرضوں میں ڈوب گئے ملک کو امپورٹ ایکسپورٹ کیلئے20ارب ڈالرکی فوری ضرورت ہے۔پی ٹی آئی حکومت پر منہگائی کا الزام لگانےوالوں نے قومی خزانوں میں کیاچھوڑا تھا، صرف نعروں اور آوازوں سے بات نہیں بنتی عوام کی خدمت سے بات بنے گی۔اپنے یان میں انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے دور میں بننے والے ترقیاتی منصوبوں اور دوسرے منصوبوں میں زمین آسمان کا فرق ہے۔ملک میں کسی چیز کی کمی نہیں،صحیح معنوں میں عوام کی خدمت کرنی ہے۔

پی آئی سی حملہ کیس ،ایف آئی آر میں و زیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی بھی نامزد

لاہورپنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی پر وکلا کے حملے سے متعلق قانونی کارروائیوں کا سلسلہ جاری ہے۔پی آئی سی حملہ کیس کی ایف آئی آر میںوزیراعظم عمران خان کے بھانجے حسان نیازی کو بھی نامزد کردیاگیاہے۔پولیس کے مطابق حسان نیازی پی آئی سی پر حملے کے وقت توڑ پھوڑمیں پیش پیش تھا ،اسے مقدمہ کی ضمنی میں نامزد کیا گیا ہے،ایس ایس پی انویسٹی گیشن کاکہنا ہے کہ اب تک پانچ چھاپے مارے گئے ہیں تاہم حسان نیازی تاحال گرفتار نہیں ہوسکے۔

واضح رہے کہ پی آئی سی پر حملے کی ویڈیوزاور تصاویر میں حسان نیازی کی موجودگی ظاہرہوئی تھی جس کے بعد سوشل میڈیا پر انہیں اور ان کے ماموں وزیراعظم عمران خان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایاگیاتھا۔

واضح رہے کہ پی آئی سی پر حملے کی ویڈیوزاور تصاویر میں حسان نیازی کی موجودگی ظاہرہوئی تھی جس کے بعد سوشل میڈیا پر انہیں اور ان کے ماموں وزیراعظم عمران خان کو شدید تنقید کا نشانہ بنایاگیاتھا۔

پی آئی سی ہسپتال کی ایمرجنسی جزوی طور پر بحال

لاہور پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی کے شعبہ ایمرجنسی کو تین دن بعد جزوی طور پر بحال کردیا گیا ہے۔

ایمرجنسی سروسز کی بحالی سے پہلے گرینڈ ہیلتھ الائنس اور ڈاکٹرز نے سروسز ہسپتال سے پنجاب انسٹی ٹیوٹ آف کارڈیالوجی تک مشعل بردار ریلی نکالی گئی۔ریلی کے شرکا نے جاں بحق افراد کیلئے دعائے مغفرت کی اور علامتی یادگار پر پھول چڑھائے۔

سربراہ انسٹی ٹیوشن پی آئی سی پروفیسر ثاقب شفیع شیخ نے کہا ہے کہ ایمرجنسی سروس کو جزوی طور پر بحال کیا گیا ہے تاہم مشینری، وینٹی لیٹرز اور ایکو مشینوں کی مرمت اور بحالی میں ابھی وقت لگے گا۔ان کا کہنا تھا کہ ہسپتال انتظامیہ نے بھرپور کوشش کر کے ایمرجنسی بحال کی ہے اور جتنے وسائل ہیں ان کے مطابق سروسز خدمات فراہم کرتے رہیں گے۔

صدر ینگ ڈاکٹرز ایسوسی ایشن پی آئی سی ڈاکٹر اعجاز کھرل نے کہاکہ ڈھائی سو میں سے پچاس بیڈز کو کارآمد بنا دیا گیا ہے۔ایمرجنسی سٹنٹ لیب اور ایکو کارڈیوگرافی کی سہولت بھی مہیا کی گئی ہے تاہم باقی وارڈز کی بحالی میں وقت لگے گا۔

ہسپتال انتظامیہ کا کہنا ہے کہ بڑے نقصانات، ٹوٹنے والے بیڈز اور شیشوں کی مرمت اور بحالی میں وقت لگے گا جس کے بعد ہی ہسپتال کے دیگر شعبوں کو مکمل طور پر فعال کیا جا سکے گا۔پی آئی سی کا کے آوٹ ڈور سے مریضوں کو ادویات کی فراہمی بھی شروع کر دی گئی ہے لیکن نئے آنے والے مریضوں کا معائنہ شروع نہیں کیا جاسکا۔ہسپتال انتظامیہ کا کہنا ہے کہ آئندہ ہفتے تمام شعبوں کو مکمل فعال کر دیا جائے گا۔